اسلام آباد(نیوز ڈیسک) وزیر اعظم عمران خاں نے کچھ عرصہ قبل امریکہ کا دورہ کیا تھا جو ہر لحاظ سے ایک کامیاب دورہ تھا جس میں ویر اعظم عمران خاں نے کھل کر پاکستان کا موقف پیش کیا اور پاکستانی کی نمائندگی بھرپور انداز میں کی اب وزیر اعظم 21 ستمبر کو امریکہ کے دورے پر جا رہے ہیں مگر اس سے قبل


وزیر اعظم عمران خاں کے 19 ستمبر کو سعودی عرب کے دورے کا بھی امکان ہے.اس حوالے سے میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کا 19ستمبر کو سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔ وزیراعظم عمران خان 21 ستمبر کو امریکا پہنچیں گے۔یو این اجلاس کے دوران وزیراعظم عالمی رہنماؤں سے ملاقات کریں گے۔یو این اجلاس میں پاکستان کشمیر میں جاری بھارتی مظالم کو بھرپور انداز میں اٹھایا جائے گا۔خیال رہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دوسری ملاقات رواں برس ستمبر میں ہونے کا امکان ہے۔ جس میں افغان امن عمل اور پاک بھارت تعلقات کے ساتھ ساتھ معیشت، دفاع اور توانائی سمیت دیگر شعبوں میں تعاون کے فروغ پر بات چیت گی۔قومی اخبار میں شائع رپورٹ میں بتایا گیا کہ دونوں رہنماؤں کے مابین یہ ملاقات اقوام متحدہ جنرل اسمبلی اجلاس کے سائیڈ لائن پر ہوگی جہاں وزیراعظم عمران خان پاکستان کی نمائندگی کریں گے جبکہ دیگر عالمی رہنماؤں کی طرح امریکی صدر بھی وہاں موجود ہوں گے ۔ سفارتی ذرائع کے مطابق وزیراعظم پاکستان عمران خان اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مابین مختصر عرصے میں دوبارہ ملاقات کا ہونا اس بات کی غمازی کرتا ہے کہ پاکستان اور امریکہ ماضی کی تلخیاں پس پشت ڈال کر آگے بڑھ رہے ہیں.
دونوں ممالک کے تعلقات میں کشیدگی ختم ہوگئی ہے اور آنے والے دنوں میں باہمی معاشی، دفاعی اور توانائی کے شعبہ میں تعلقات میں وسعت دیکھنے میں آئے گی۔ وزیراعظم عمران خان ایک طرف جہاں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے اپنے خطاب میں مسئلہ کشمیر کے حل پر زور د یں گے۔ وہیں دوسری جانب وہ امریکی صدر کے ساتھ ملاقات میں بھی اس اہم تنازعہ کے حل کی اہمیت کو اجاگر کریں گے ۔ وزیراعظم پاکستان اپنے دورہ نیویارک میں امریکی صدر کے علاوہ دیگر اہم عالمی رہنماؤں کے ساتھ بھی ملاقاتیں کریں گے جن میں علاقائی اور عالمی معاملات پر بات چیت گی۔وزیر اعطم عمران خاں کا یہ دورہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے.

Sharing is caring!